منگل , 27 اکتوبر 2020
Home / خبریں / چھوٹے کسانوں کا تحفظ اولین ترجیح ہے، کمشنر ساہیوال

چھوٹے کسانوں کا تحفظ اولین ترجیح ہے، کمشنر ساہیوال

ساہیوال (ساہیوال نیوز لائیو – 22 ستمبر 2020 – عقیل اشفاق) چھوٹے کسانوں کے مالی مفادات کا تحفظ اور انہیں معیاری کھاد، بیج اور زرعی ادویات کی فراہمی پنجاب حکومت کی ترجیحات میں شامل ہے جس کے لئے دورس اقدامات اٹھائے گئے ہیں.

کسانوں کو فصلوں کا بہتر معاوضہ دلانے کے لئے منڈیوں میں نیلامی کے وقت مارکیٹ کمیٹی کے نمائندوں کی موجودگی کو بھی یقینی بنایا گیاہے تا کہ مڈل مین چھوٹے کسانوں کا مالی استحصال نہ کر سکے اور انہیں فصلوں کا معقول معاوضہ دلایا جا سکے-

یہ بات کمشنر ساہیوال ڈویژن محمد احسن وحید نے ڈویژنل ایگریکلچر ایڈوائزری کمیٹی کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہی جس میں ڈپٹی کمشنر ساہیوال بابر بشیر، ڈپٹی کمشنر پاکپتن احمد کمال مان، اے ڈی سی ریونیو اوکاڑہ صبا اصغر، ایڈیشنل کمشنر کوآرڈینیشن ایس ڈی خالد، ڈائریکٹر زراعت محمد فاروق، ڈائریکٹر لائیو سٹاک ڈاکٹر غلام مصطفی اورایکسین ایریگیشن یاسر منیرکے علاوہ کسانوں کے نمائندوں اور کھاد و زرعی ادویات سپلائی کرنے والی کمپنیوں کے نمائندوں نے شرکت کی۔

کمشنر نے منڈیوں میں چھوٹے کسانوں کے استحصال کی شکایات کا سخت نوٹس لیتے ہوئے تینوں اضلاع کی انتظامیہ کو ہدایت کی کہ تمام اجناس خصوصا سبزیوں کی نیلامی کے وقت مارکیٹ کمیٹی کے نمائندے ضرور موجود ہوں اور وہ نیلامی کو سنجیدگی سے مانیٹر کریں اور وزن میں ناجائز کٹوتی کو ہر حالت میں روکیں۔

انہوں نے کھادوں کی ناجائز منافع خوری پر بھی تشویش ظاہر کرتے ہوئے ہدایت کی کہ محکمہ ریونیو اور زراعت کی مشترکہ ٹیمیں زرعی مداخل کی قیمتوں اور معیار کو چیک کریں اور مقررہ نرخوں پر فروخت کو یقینی بنائیں –

ڈائریکٹر زراعت محمد فاروق نے بتایا کہ اس سال کھادوں کو مقررہ قیمت سے زائد فروخت کرنے والی دوکانوں کو 6لاکھ روپے سے زائد جرمانہ عائد کیا جاچکا ہے جبکہ نمک کی ملاوٹ کو بھی چیک کیا گیا –

اجلاس میں کسان تنظیموں کے نمائندوں نے بجلی کے نرخوں میں ہوشربا اضافہ،ضرورت کے وقت کھادوں کی قلت اورقیمتوں میں بے تحاشا اضافے اور نہری پانی کے ٹیل تک نہ پہنچے کی شکایت کی جس پر کمشنر محمد احسن وحید نے متعلقہ محکموں کو ہدایت کی کہ وہ کسانوں سے قریبی رابطہ قائم کر کے ان کی شکایات کا فوری ازالہ کریں –

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے