بدھ , 21 اکتوبر 2020
Home / تعلیم / یونیورسٹی آف ساہیوال میں اینٹی کرپشن اور کردار سازی پر سیمینار

یونیورسٹی آف ساہیوال میں اینٹی کرپشن اور کردار سازی پر سیمینار

ساہیوال (ساہیوال نیوز لائیو – 25 ستمبر 2020 – عقیل اشفاق) معاشرے سے کرپشن اور بد عنوانی کا خاتمہ معاشرتی دباؤ کے بغیر ممکن نہیں، ہر فرد کو چاہیے کہ وہ ملک کی اقتصادی و سماجی ترقی میں حائل ان اہم رکاوٹوں کو دور کرنے میں نیب سے تعاون کریں، ملک کا مستقبل نوجوان نسل کے ہاتھ میں ہے جن پر بد عنوانی، اقرباء پروری اور رشوت کے خاتمے میں بھر پور کردار ادا کرنے کی بھاری ذمہ داری عائد ہوتی ہے –
یہ بات نیب لاہور کے ڈائریکٹر سید محمد حسنین احمد نے یونیورسٹی آف ساہیوال میں ”اینٹی کرپشن اور کردار سازی“ کے موضوع پر ہونے والے ایک سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کہی جس میں فکیلٹی ممبران شعبہ بزنس ایڈمنسٹریشن کے سربراہ ڈاکٹر وارث علی،شعبہ اکنامکس کے سربراہ ڈاکٹر محمد عبداللہ،شعبہ کیمسٹری کے سربراہ ڈاکٹر امین عابد، شعبہ کیمسٹری کی اسسٹنٹ پروفیسر اور پروگرام کوارڈینیٹر ڈاکٹر شافیہ افتخار،ڈائریکٹر سٹوڈنٹ آفیئر ڈاکٹر عبدالمجید اور ڈپٹی رجسٹرار عبد الرحمن سمیت فکیلیٹی ممبران نے بھی شرکت کی –
انہو ں نے کہا کہ نیب اب تک کرپٹ عناصر سے اربو ں روپے قومی خزانے میں واپس جمع کروا چکا ہے اور رشوت ستانی کے خاتمے تک اپنا کردار ادا کرتا رہے گا –
انہوں نے اساتذہ پر زور دیا کہ وہ تعلیم کے ساتھ ساتھ سٹوڈنٹس کی کردار سازی پر بھی توجہ دیں تا کہ معاشرتی بیماریوں خصوصا رشوت اور بد عنوانی کو روکا جا سکے – ڈائریکٹر نیب سید محمد حسینین نے سیمینار سے خطاب میں نیب کے کردار اور اس کے اغراض و مقاصد اور اب تک کی کامیابیوں پر تفصیلی روشنی ڈالی –
بعد ازاں سیمینار کے شرکاء نے کرپشن کے خلاف ایک واک کا اہتمام بھی کیا جو ایڈمنسٹریشن بلاک پر ختم ہوئی –

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے